کرونا اک ایسی وبا ہے جو کسی کو نہ بخشتی ہے

(مہک یوسف ضعی پٹھان)

اک سے دو کو؛ دو سے چار کو لگتی ہے
یہ وبا کسی کو نہ بخشتی ہے
ہاتھ سے لگ کر حلق میں اترتی ہے
گلے سے اترتے ہی؛ پھیپھڑوں کو جکڑتی ہے
سانس میں رکاوٹ؛ وینٹیلیٹر تک پہنچاتی ہے
پیچھا نہ چھوڑتی لحد تک اتارتی ہے
نہ ڈاکٹر سے پچتی ہے؛ نہ پولیس سے یہ ڈرتی ہے
صفائی سے بھاگتی؛نزدیک سے پھیلتی ہے
تندرست کو دیکھتے ہی تیاری پکڑتی ہے
چھینک، کھانسی،زکام سے بڑھتی ہے
جو بچ جائیں غلطی سے؛ انہیں پھر سے پکڑتی ہے
نہ مسلک، نہ مہذب،نہ مرکز کو دیکھتی ہے
یہ ایسی وبا ہے جو کسی کی نہ بخشتی ہے

Comments are closed.