گھر پہ رہنا

(عابد محمود عابد)

گھر پہ رہنا
ہر کسی سے اتنا کہنا گھر پہ رہنا
میرے بھائی! میری بہنا! گھرپہ رہنا
چند ہفتے قید سہنا گھر پہ رہنا
مان مت جذبات کہنا گھر پہ رہنا
میرے اپنو! تم سلامت سب سلامت
مال دولت اور گہنا گھر پہ رہنا
کہہ رہے ہیں تتلی، بلبل، پھول، غنچہ
پھل، کلی اور شاخ، ٹہنا گھر پہ رہنا
شاعری نے جاں بچائی ہے کسی کی
دل میں اُترا میرا کہنا گھر پہ رہنا
بس یہی ہے التجا عابد کی سب سے
دوستو! محفوظ رہنا گھر پہ رہنا

Comments are closed.