ہَے جو دُنیا میں روشنی مولا

(غزالی ؔ_گوجرہ)

ہَے جو دُنیا میں روشنی مولا
مہربانی ھَے سب تِری مولا

تیرا فرمان جس نے مان لیا
مِل گئی اُسکو آگہی مولا

ہم کو محفوظ رکھ کرونا سے
بخش دے ہم کو زِندگی مولا

دُوسرا کون ھَے جہاں بھر میں
ہَے فقط تیری بَندگی مولا

ساری دُنیا پُکارتی ھَے تُجھے
ساری دُنیا کا بَس تُو ہی مولا

اِس وَبا سے نجات مِل جائے
کھِل اُٹھے دِل کی ہَر کلی مولا

ہر مسیحا ھے بَر سرِ پیکار
کیسی مُشکل ھے یہ گھڑی مولا

ایسی مخلوق کو ہدایت دے
جو گُناہوں میں گھِر گئی مولا

اب غزالیؔ بھی سَر بسجدہ ھَے
مان لے اِسکی حاضری مولا

Comments are closed.