کرونا سے کیونکر ڈریں دوستو

(ماہناز بنجمن)

کرونا سے کیونکر ڈریں دوستو

کرونا سے کیوں نہ لڑیں دوستو

جوہاتھوں کو دھونا گوارہ کریں

تو بیماریوں سے کنارہ کریں

ہے محتاط رہنے میں جب زندگی

تو بے موت ہم کیوں مریں دوستو

کرونا سے کیوں نہ لڑیں دوستو

صفاٸ کی عادت کو اپناٸے

کفن اب کرونا کو پہناٸے

کہ خطرے سے خالی نہیں راستے

مناسب ہے گھر پہ رہیں دوستو

کرونا سے کیوں نہ لڑیں دوستو

عطا کی ہے رب نے فضیلت ہمیں

میسر ہے حکمت کی دولت ہمیں

ہمارا مقدر وباٸیں نہیں

نہ تاوان ان کا بھریں دوستو

کروناسے کیوں نہ لڑیں دوستو

دعاٸیں مسلسل کیا کیجیے

کسی کی دعا بھی لیا کیجیے

سلجھتی چلی جاٸیں گیالجھنیں

بھروسہ جو رب پہ کریں دوستو

کرونا سے کیوں نہ لڑیں دوستو

Comments are closed.