اے ہوا ، اے روشنی ،اے زندگی

(ازہر ندیم)

اے ہوا، اے روشنی ،اے زندگی
اے صبا، اے تازگی ،اے سرخوشی
اے صدا، اے شاعری، اے نغمگی
اے دعا، اے حرف، اے تابندگی
اے فضا ،اے آسماں ، اے دلکشی
اے کمالِ حسن ِ انساں
اے جمال ِ خوش خصال
اے نواۓ عصرِ حاضر
اے طبیبِ بے مثال
بولنے کا وقت ہے کچھ بول اب
بھید کیا ہے اس وبا کا کھول اب
آ اداسی کو مٹا اور یہ زمیں شاداب کر
آ گھٹن کے موسموں کو ہم کہیں اب الوداع
اے ہوا ،اے روشنی ،اے زندگی
اے صبا ،اے تازگی ،اے سرخوشی!

Comments are closed.