کوٸی ھے۔۔۔۔؟

(حمیرہ نور)

کوٸی ھے۔۔۔۔؟
میری آواز سنو
میرے بچے بوکھے ھیں
اللہّ رسولّؓ کے واسطے
او بنگلے والو
اے امیرو
اے پٸسے والو
او فلیٹوں میں رھنے والو
اس غریب کی صدا سنو
میں مسکین ھوں
لاچار ھوں
بیواہ ھوں
مجبور ھوں
بے بس ھوں
اے امیرو میں غریب ھوں
میرے بچے
دو دن سے بوکھے ھیں
مجھے صرف کھانا دو
کچا دو یا پکا دو
مجھے کھانا دو
کوٸی ھے
میری آواز سنو
اس غریب پے رحم کھاوُٗ
اللہ تمہیں بہت دے گا
میرے بچے بوکھے ھیں
مجھے کھانا دو
یا دعا کرو
میرے سمیت میرے بچوں کو
یہ بیماری لگ جاٸے
اور سرکار ھمیں اُٹھاکر لے جاٸے
وہاں
کم سے کم بیس دن
کھانا تو ملے گا
دواٸی بھی ملے گی
اے شھر کے امیرو
مجھے کھانا دو
یا دعا کرو
ھمیں یہ بیماری لگ جاٸے۔

Comments are closed.