ہماری ہمت کو آزمانے

( ڈاکٹر محمد اشرف کمال )

نظم۔۔ “کرونا”
ہماری ہمت کو آزمانے
وبا کا شیطان شہرِ جاں میں
گھناونا روپ بھر کے آیا
مگر ابھی تک
بلند ہیں حوصلے ہمارے
کہ ہم کو دیکھو ہٹے نہ پیچھے جھکے نہ نیچے
کسی بھی صورت ڈرے نہیں ہم
کہ سامنے اس کے بند باندھے کھڑےہوئے ہیں
مقابلہ ڈٹ کے کر رہےہیں
کہ کچھ بھی کرلے
یہ ہم سے ہرگز نہیں بچے گا
نہیں بچے گا

Comments are closed.