بس گھر میں آپ بیٹھیے آرام کیجیے

(احمد مسعود قریشی)

بس گھر میں آپ بیٹھیے آرام کیجیے

اپنوں سے بات فون پہ ہر شام کیجیے

ہاتھوں کو مت ملائیں کسی سے بھی آج کل

پھیلی وبا ہے شہر میں یہ کام کیجیے

رہتا ہوں فیس بک پہ میں اکثر ہی جان جاں

کرنی ہے چیٹ ہم سے تو پیغام کیجیے

دوری رکھو سبھی سے کرونا نہ آ ملے

لوگوں کو دور رہنے کے احکام کیجیے

صابن سے ہاتھ دھونا ضروری ہے دوستو

کیسے بچیں کرونا سے یہ عام کیجیے

کرتے دعا ہیں رب سے مصیبت کو ٹال دے

ہر وقت اس کے ذکر کا اقدام کیجیے

Comments are closed.