شاعر جوش ملیح آبادی کی 38 ویں برسی

اسلام آباد (پ ۔ ر) صوبائی وزیر مینجمنٹ اینڈ پروفیشنل ڈیولپمنٹ پنجاب سید حسین جہانیاں گردیزی نے ایچ 8 قبرستان اسلام آباد میں معروف شاعر جوش ملیح آبادی کی 38 ویں برسی کے موقع پر اکادمی ادبیات پاکستان کی طرف سے ان کی قبر پرفاتحہ خوانی کی اور پھولوں کی چادر چڑھائی۔ اس موقع چیئرمین جوش ادبی فاؤنڈیشن سید غضنفر مہدی، اکادمی ادبیات پاکستان کے طارق شاہد، علامہ فروس عالم، صدر ادبی تنظیم دائرہ احسان کبیریا، چوہدری اعظم، اخلاق زیدی، محمد جمال خان اور دیگر اہل قلم بھی موجود تھے۔ فاتحہ خوانی کے بعد اکادمی ابیات پاکستان کے رائٹر ہاوس میں ادبی تنظیم دائرہ کے تحت ایک نشست ہوئی شرکاء نے جوش ملیح آبادی کو خراج عقیدت پیش کیا اور ان کا کلام بھی پڑھا گیا۔ صوبائی وزیر منصوبہ بندی پنجاب سید حسین جہانیاں گردیزی نے کہا کہ جوش ملیح آبادی ایک انقلابی اور صاحب بصیرت شاعری تھے اور ان کا شعری سخن آج کی نوجوان نسل کے لئے مشعل راہ ہے۔ زندہ قومیں اپنے شاعروں کو یاد رکھتی ہیں اور جوش ملیح آبادی جیسے محب وطن شاعر ملک کے لئے اعزاز کی حیثیت رکھتے ہیں۔غضنفر مہدی نے کہا کہ جوش ملیح آبادی کی برسی ان کے ادبی اور قومی مقام کے شان شیان منانے کی ضروت ہے اور ان کی برسی کے موقع پر ان کو نظر انداز کرنا ہمارے قومی وقار کے منافی ہے۔

Comments are closed.