نامورماہر تعلیم اورمورخ پروفیسر شریف المجاہد کے انتقال پر اکادمی ادبیات کی تعزیت

اسلام آباد (پ ۔ ر) پروفیسر شریف المجاہد کی قائداعظم کے حوالے سے شائع ہونے والی کتاب اور مضامین تاریخی کتب کا اہم سرمایہ ہے۔ ان کے انتقال سے پاکستان ایک اہم لکھنے والے اور مورخ سے محروم ہو گیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار اکادمی ادبیات پاکستان کے چیئرمین محمد سلمان نے نامورماہر تعلیم، مورخ اور تحریک پاکستان پر متعدد کتابوں کے مصنف پروفیسر شریف المجاہد کے انتقال پر تعزیتی پیغام میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ پروفیسر شریف المجاہد کو 1976میں “قائداعظم اکیڈمی” کا بانی ڈائریکٹر مقرر کیا، انہوں نے اکیڈمی کے لیے گراں قدر خدمات انجام دیں۔ ان کی تصانیف میں “قائداعظم، ایک موضوعاتی مطالعہ” کو 1981 میں صدارتی ایوارڈ سے نوازا گیا۔ ان کی کتاب”انڈین سیکولرازم” بھی موضوع کے اعتبار سے اہم کتاب ہے، جس کا عربی ترجمہ بھی شائع ہوا۔ چیئرمین اکادمی ادبیات محمد سلمان نے پروفیسر شریف المجاہد کے لیے مغفرت اور لواحقین کے لیے صبر جمیل کی دعا کی۔

Comments are closed.