مذاکرہ: قائد اعظم کے نظریاتی رفقاء


مذاکرہ قائد کے نظریاتی رفقا راجہ یاسین بیگ، محمد حمید شاہد، ڈاکٹر احسان اکبر، جلیل عالی،ظہیر گیلانی، رحمان حفیظ تعاون انحراف

اسلام آباد(پ ر) اکادمی ادبیات پاکستان کے زیر اہتمام” ہفت روزہ تقریبات بسلسلہ یوم قائد“ کے موقع پرا نحراف کے تعاون سے مذاکرہ”: قائد اعظم کے نظریاتی رفقاء“منعقد ہوا ۔ صدارت ڈاکٹر احسان اکبر نے کی۔پروفیسر جلیل عالی اور محمد حمید شاہد مہمانان خصوصی تھے۔ راجہ یٰسین بیگ(کینیڈا) ، ظہیر گیلانی اور دیگر اسکالرز نے موضوع کی مناسبت سے گفتگو کی۔ ڈاکٹر احسان اکبر نے کہا کہ قائداعظم محمد علی جناح خود صاحب کردار تھے اور فطرت کے منتخب آدمی تھے۔ ان کے رفقابھی منتخب آدمی تھے اور اسی طرح کے صاحبانِ کردار تھے۔ پاکستان جیسا کرشمہ ان ساحرانہ شخصیتوں کے بغیر ممکن نہیں تھا۔ محمد حمید شاہد نے کہا کہ قائداعظم کے ساتھیوں کا نظریاتی ہونا بھی دراصل خود قائداعظم کی شخصیت کا کمال تھا۔ قائداعظم کی ٹیم میں جو مقام اقبال کا ہے وہ کسی اور کو نہیں دیا جا سکتا۔ پروفیسر جلیل عالی نے کہا کہ قائداعظم کی جدوجہد اور اس کی کامیابی کے پیچھے وہ نظریاتی وابستگی ہے جو قائد اپنے رفقاپر بے حداعتماد کرتے تھے۔ ظہیر گیلانی نے کہا کہ قائداعظم خوش قسمت تھے کہ انہیں ایسے ساتھی ملے جنہوں نے قائداعظم کے نظرےے سے اپنی وابستگی کو ہمیشہ اہم اور مستحکم سمجھا۔

Comments are closed.