اکادمی ادبیات پاکستان کا اظہارِیکجہتی کشمیر

اسلام آباد(پ۔ر)پاکستان کے اہل قلم کشمیر میں ہونے والے مظالم کے خلاف صدائے احتجاج بن کر عالمی دنیا کے سامنے بھارتی مظالم کے خلاف اپنے قلم سے احتجاج کرتے رہے گے۔ یہ بات اکادمی ادبیات پاکستان کے زیر اہتمام ، اکادمی کے چیئرمین ڈاکٹر انعام الحق جاوید نے وزیراعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان کے اعلان کے مطابق کشمیریوں سے اظہار یک جہتی کے لےے اکادمی ادبیات پاکستان کے دفتر کے سامنے کر بھارتی جارحیت کے اور کشمیریوں سے انسانیت سوز سلوک کے خلاف سیاہ پٹیاں ”# میں کشمیر ہوں“ باندھ کراحتجاج کرتے ہوئے کہی۔ تمام عملے نے بازووں پر سیاہ پٹیاں باندھی ہو ئی تھیں۔ اس موقع پراختر رضا سلیمی، ملک مہر علی ، طارق شاہد، ڈاکٹر علی یاسر اور دیگراہل قلم نے بھارتی جارحیت کے خلاف مذمت کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی عوام کو ان کا حق ملنا چاہیے اور اُن پر جو انسانیت سوز مظالم کےے جارہے ہیں ، عالمی ادارے اُن کا فوری طور پر نوٹس لے۔حکومت نے کشمیریوں کے لیے جو اقدام کیے ہیں، قابل ستائش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی اہل قلم کشمیریوں کی آواز بن کر بھارتی جارحیت کے خلاف اپنے قلم کے ذریعہ کشمیری مظلوموں کی آواز بنیں گے۔اکادمی کی طرف سے اظہار یک جہتی میں کشمیر میں شہید ہونے والوں کے لیے دعا بھی کی گئی۔


Press Release

Islamabad (P. R). The Pakistani writers, poets and scholars will continue to rise their voice through their writings in favour of their Kashmiri brothers who are victims of brutalities and tyrannies of Indian army in Indian Occupied Kashmir. These views were expressed by Dr. Inaam Ul Haq Javed, Chairman, PAL, during the gathering of writers and staff of PAL with black band of “# I AM KASHMIR” in front of PAL’s head office building to observes solidarity event on Friday(25-10-2019)under the directive of the Prime Minister of Islamic Republic of Pakistan.

The participants reiterated their unity and commitment with Kashmiris and emphasized upon international community to come forward for solution of this long outstanding issue for peace and prosperity in the region. Fateh was also offered for martyred of the freedom movement in Indian Occupied Kashmir.

Comments are closed.